Wo Soye Lalazar Phirte Hai (Lyrics) - Muhammad Shahzaib Qadri Irfani (وو سوئی لالہ زار پھرتے ہیں)

 


Wo Sue Lalah Zar Phirte Hain

Wo Sue Lalah Zar Phirte Hain
Tere Din Ae Bahar Phirte Hain

Jo Tere Dar Se Yar Phirte Hain
Dar Badar Youn Hi Khwar Phirte Hain

Ah Kal Aesh Toh Kiye Humne
Aj Woh Beqarar Phirte Hain

Har Charagh e Mazar Par Qudsi
Kaise Parwanawar Phirte Hain

Us Gali Ka Gada Hoon Main Jisme
Mangte Tajdar Phirte Hain

Jan Hain Jan Kya Nazar Aye
Kyon A’du Gird e Gar Phirte Hain

Phool Kya Dekhun Meri Ankhon Me
Dasht e Taiba Ke Khar Phirte Hain

Lakhon Qudsi Hain Kar e Khidmat Par
Lakhon Gird e Mazar Phirte Hain

Haye Ghafil Woh Kya Jagah Hai Jahan
Panch Jate Hain Char Phirte Hain

Koi Kyon Puche Teri Bat Raza
Tujhse Kutte Hazar Phirte Hain


وو سوئی لالہ زار پھرتے ہیں

وہ سوئے لالہ زار پھرتے ہیں
تیرے دن اے بہار پھرتے ہیں

جو تیرے در سے یار  پھرتے ہیں
در بدر  یوں ہی خوار پھرتے ہیں

ہر چراغ مزار پر قدسی
کیسے پروانہ وار پھرتے ہیں

اس گلی کا گدا ہوں میں جس میں
مانگتے تاجدار پھرتے ہیں

لاکھوں قدسی ہیں کا م خدمت پر
لاکھوں پروانہ وار پھرتے ہیں

ہائے غافل وہ کیا جگہ ہے یہاں
پانچ جاتے ہیں چار پھرتے ہیں

کوئی کیوں پوچھے تیری بات رضا
تجھ سے کتنے ہزار پھرتے ہیں
Tags

#buttons=(Accept !) #days=(20)

Our website uses cookies to enhance your experience. Learn More
Accept !